شہباز شریف دور میں لاپتہ افراد کی تعداد میں اضافہ ہو رہا ہے: پرویزالٰہی

لاہور: سابق وزیراعلیٰ پنجاب و مرکزی صدر پاکستان تحریک انصاف چودھری پرویزالٰہی سے سابق ارکان اسمبلی اور سیاسی رہنمائوں نے ملاقات کی۔

ملاقات میں سابق صوبائی وزیر محمد بشارت راجہ، میاں شفیع محمد، سلیم بریار، جی ایم سکندر اور دیگر بھی موجود تھے۔

چودھری پرویزالٰہی نے سابق چیئرمین شکایت سیل زبیر احمد خان کے اغوا کی بھرپور مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ شہباز شریف کے دور میں لاپتہ افراد کی تعداد میں بے پناہ اضافہ ہو رہا ہے۔

لوگوں کو خوف و ہراس میں مبتلا کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے قریبی ساتھیوں کو بلاوجہ غیر قانونی طور پر نامعلوم افراد گھروں سے اغوا کر رہے ہیں۔

سابق چیئرمین شکایت سیل زبیر احمد خان کو گزشتہ روز گھر کے باہر سے فیملی کے سامنے اغوا کر لیا گیا، فیملی کو ہراساں کرنے کے ساتھ ساتھ دھمکایابھی گیا۔

انہوں نے کہا کہ زبیر احمد خان نے سیلاب کے دوران پاکستان آرمی کے ساتھ مل کر ترکیہ کی جانب سے قائم ترکش سوسائٹی کے ساتھ مل کر شانہ بشانہ کام کیا۔

چودھری پرویزالٰہی نے مزید کہا کہ نا اہل حکمران زیادتیوں کی انتہا کئے جا رہے ہیں، وفاقی اور نگران پنجاب حکومت نے ظلم کی انتہا کر دی ہے۔

محمد بشارت راجہ، میاں شفیع محمد اور سلیم بریار نے بھی زبیر خان کے اغوا کی مذمت کی۔ راجہ بشارت نے کہا کہ حکمران اوچھے ہتھکنڈوں پر اتر آئے ہیں اور بے گناہ افراد کو بلاوجہ اغوا کیا جا رہا ہے۔ تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے بھی غیر قانونی گرفتاریوں کی مذمت کی ہے۔

سلیم بریار نے کہا کہ عمران خان نے ہمیشہ ظلم کے خلاف آواز بلند کی ہے، پی ٹی آئی کا ہر کارکن حکمرانوں کے ظلم کے سامنے سیسہ پلائی دیوار ثابت ہو گا۔